Home / Urdu Articles (page 2)

Urdu Articles

Articles in urdu languages.
hinaji.com provides different article styles and different way of topics.
There is latest thinking on life and about the people experiences.
urdu article , latest uk and pakistani article detail in urdu ,
latest online stories , urdu stories , popular urdu article .
pakistan aur dosri dunya k urdu zuban main article.

موبائل فون کے فوائد اور نقصانات

موبائل فون کے فوائد تو بے شمار ہیں لیکن ایک نئی تحقیق کے مطابق اس کے کچھ نقصانات بھی ہیں اور وہ مرد جو موبائل فون کو اپنی پتلون کی جیب میں رکھتے ہیں ان میں سپرم کی کوالٹی متاثر ہوسکتی ہے اور انہیں صاحب اولاد ہونے میں مشکلات پیش آسکتی ہیں۔ یونیورسٹی آف ایکسیٹر کی سائنسدان ڈاکٹر فیونا کی سربراہی میں کی گئی تحقیق میں معلوم ہوا ہے کہ موبائل فون کے اعضائے تناسل کے قریب ہونے سے الیکٹرومیگنیٹک شعاعیں جنسی خلیات پر منفی اثرات مرتب کرتی ہیں اور سپرم کی صحت اور حرکت کرنے کی صلاحیت کو متاثر کرتی ہیں جس کی وجہ

الیکٹرومیگنیٹک شعاعیں جنسی خلیات پر منفی اثرات
الیکٹرومیگنیٹک شعاعیں جنسی خلیات پر منفی اثرات

سے سپرم کی مادہ کے انڈے کی طرف پیش قدمی متاثر ہوتی ہے اور مردوں میں پانجھ پن کے مسائل پیدا ہوسکتے ہیں۔ ڈاکٹر فیونا کا کہنا ہے کہ موبائل فون کی شعاعیں سپرم کی صحت کے علاوہ سیمن میں سپرم کی تعداد کو بھی متاثر کرتی ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ عام طور پر 50 سے 85 فیصد سپرم نارمل طور پر حرکت کرنے کے قابل ہوتے ہیں لیکن موبائل فون کی شعاعوں سے متاثر ہونے والوں میں یہ تعداد تقریباً 8 فیصد تک رہ جاتی ہے۔ انوائرنمنٹ انٹرنیشنل میں شائع ہونے والی اس تحقیق میں لیپ ٹاپ کمپیوٹر کوگود میں رکھ کر استعمال کرنے کے بھی ایسے ہی نقصانات بتائے ہیں۔ تاہم یونیورسٹی آف شیفیلڈ کے تولیدی صحت کے ماہر ڈاکٹر ایلن کا کہنا ہے کہ وہ اس تحقیق سے متاثر نہیں ہوئے اور جب تک مزید قابل اعتماد تحقیقات سامنے نہیں آئیں وہ اپنا موبائل فون پتلون کی جیب میں ہی رکھیں گے۔

موبائل فون کے فوائد اور نقصانات
موبائل فون کے فوائد اور نقصانات

لڑکیاں کس طرح کے مردوں کو پسند کرتی ہیں

لڑکیاں کس طرح کے مردوں کو پسند کرتی ہیں؟ حیران کن تحقیق

اکثر مردوں کے دل میں کہیں نہ کہیں  بات ضرور ہوتی ہے کہ لڑکیاں انہیں پسند کریں اور وہ صنف نازک میں ہر دلعزیز ہوں اور اس مقصد کے لئے وہ مختلف جتن بھی کرتے ہیں۔عموماً دیکھا گیا ہے کہ نوجوان لڑکیاں خوش مزاج لڑکوں کو پسند کرتی ہیں۔ ان کی پسندیدگی کی ایک وجہ تو یہ ہوسکتی ہے کہ نکتہ نظر اور سڑیل مزاج کو کوئی بھی پسند نہیں کرتا اور کم از کم خوابوں کا شہزادہ بنانے کا سپنا تو کوئی نہیں دیکھ سکتا۔ آئیے آپ کو بتاتے ہیں کہ لڑکیاں عام طور پر مزاحیہ اور ہنس مکھ نوجوان کو کیوں پسند کرتی ہیں۔
-1 خوش مزاج نوجوان دل لبھانے والے ہوتے ہیں۔
-2 ایسے نوجوان تخلیقی صلاحیتوں کے قدرتی خزانے سے مزین ہوتے ہیں۔ انہیں کوئی بھی مشکل ٹاسک دے دیا جائے تو اس کا حل فوری طور پر دیتے ہیں۔ مذاق ہی مذاق میں کام بھی کردیتے ہیں اور روتے ہوئے کو ہنسا بھی دیتے ہیں۔
-3 ایسے نوجوان بہت ہی سماجی ہوتے ہیں۔ معاشرے میں ان کو روابط و مکتبہ فکر سے ہوتے ہیں۔ ان کی موجودگی میں بوریت نام کی کوئی چیز نہیں پنپ سکتی۔ خاموشی کو توڑنے کے فن سے آشنا ایسے لوگ بہت ہی سچے دل کے ہوتے ہیں۔
-4 خوش مزاج لوگوں کی مشاہداتی قوت عام لوگوں سے زیادہ ہوتی ہے۔ یہ لوگ ایک ہی نظر میں ساری خرابیوں اور خوبیوں کو بھانپ لیتے ہیں اور پھر ماحول کے مطابق بات کو آگے بڑھاتے ہیں۔
-5 ایسے لوگوں کی موجودگ میں ہر کوئی خود کو محفوظ تصور کرسکتا ہے بلکہ لڑکیاں تو ہر حوالے سے خوش اور محفوظ رہ سکتی ہیں۔ یہ لوگ ماحول کو خوشگوار بنانے کیلئے مثبت اقدامات اٹھاتے ہیں۔
-6 ایسے لوگ دوستی کے تقاضوں کو پورا کرنے کیلئے جان کی بازی لگانے سے بھی گریز نہیں کرتے، وہ بہترین دوست، بہترین ساتھی، بہترین محافظ اور بہترین انسان ثابت ہوتے ہیں۔
-7 خوش کن لوگوں کے ہاں اعتماد کی کمی نہیں ہوتی۔ وہ اعتماد میں رہتے ہیں اور اعتماد میں رکھتے ہیں۔ اعتماد توڑنے کا مطلب ان کے نزدیک ایمان ختم کرنے کے مترادف ہوتا ہے لہٰذا انہیں قابل بھروسہ کہا جاسکتا ہے۔
-8 سب سے بڑی بات کہ ایسے لوگ روتوں کو ہنساتے ہیں اور شگوفوں کی ایسی برسات کرتے ہیں کہ ہر کوئی خوشگوار دکھائی دینے لگتا ہے۔ یوں کہہ سکتے ہیں کہ چہروں پر مسکراہٹیں سجانے کا فن ان سے زیادہ کسی اور کو نہیں آتا۔

لڑکیاں کس طرح کے مردوں کو پسند کرتی ہیں
لڑکیاں کس طرح کے مردوں کو پسند کرتی ہیں

شخصیت کا پہلا تاثر نہایت اہمیت کا حامل ہوتا ہے

شخصیت کا پہلا تاثر نہایت اہمیت کا حامل ہوتا ہے
شخصیت کا پہلا تاثر نہایت اہمیت کا حامل ہوتا ہے

یہ بات کافی حد تک درست ہے کہ شخصیت کا پہلا تاثر نہایت اہمیت کا حامل ہوتا ہے۔ خاص کر اگر بات تصویر کی ہو تو پھر دیکھنے والے کی پہلی نگاہ جو تاثر قائم کرتی ہے، وہ تادیر قائم رہتا ہے۔ تمام افراد اور خاص کر خواتین اپنی تصویر کی بارے میں بہت ٹچی یا حساس ہوتی ہیں۔ اگر آپ کی ”پروفائل“ تصویر جاذب نظر ہے تو کیا ہی کہنے۔ مگر اگر آپ جاذب نظر نہیں بھی ہیں تو تصویر کو کیسے جاذب نظر بنایا جائے۔ اس مقصد کیلئے ہم آپ کو کچھ تجاویز بتاتے ہیں جو یقیناً آپ کے لئے مددگار ہوں گی۔
پہلا بنیادی نکتہ تو یہ ہے کہ آپ دنیا کو مصنوعی مسکراہٹ سے بیوقوف نہیں بناسکتے۔ کیوں آپ کی آنکھیں مصنوعی اور اصلی کا راز فاش کردیتی ہیں۔ آپ کا چہرہ بھرپور طور پر مسکراتے ہوئے جتنا بھی بھلا لگے اور آپ کے سفید موتیوں جیسے دانت جتنے بھی اچھے ہوں منہ کھول کر تصویر نہ بنوائیں، مطلب اپنی مسکراہٹ سے جانکاری پیدا کریں۔ دانت ضرور واضح کریں مگر ایک حد تک، چہرے یا ہونٹوں کے مختلف زاویے بلاشک توجہ کھینچتے ہیں مگر یاد رہے کہ چند ہی مرد اور خواتین ”پرفیکٹ سمائل“ کے حامل ہوتے ہیں۔ اگر آپ اسے خود سے بنانے کی کوشش کریں تو کام خراب بھی ہوسکتا ہے اور آپ کی تصویر کا تاثر بگڑ سکتا ہے۔
چہرے یا مسکراہٹ کو میک اپ کے ذریعے بہتر بھی بنایا جاسکتا ہے۔ اس کے علاوہ کیمرہ کے استعمال کی تکینک سے آگاہی بھی بہتر نتائج دے سکتی ہے۔ مگر یاد رہے کہ چہرے کے داغ دھبے اور آنکھوں کے گرد دائرے وغیرہ کو چھپانے کیلئے میک اپ کا حد سے زیادہ استعمال مثبت کے بجائے منفی نتائج بھی دے سکتا ہے۔ بعض اوقات آپ نے تصویروں میں اپنے یا دوسروں کے چہروں پر ایک ناپسندیدہ چکنی چمک محسوس کی ہوگی۔ اس کی وجہ یا تو گلوس کا زیادہ استعمال یا جلد کا چکنا ہونا ہے۔ اس خامی کو دور کرنے کیلئے پاﺅڈر یا آئل بلاٹنگ شیٹ استعمال کریں۔
یاد رکھیں کہ آنکھوں اور ہونٹوں پر اتنا بھی زیادہ میک اپ نہ کریں۔ ایک حد میں رہ کر ہی ایسا کریں کیونکہ کلوز اپ میں کیمرے کی آنکھ آپ کی تمام خامیاں آشکار کردے گی۔ لپ اسٹک کے انتخاب میں آپ کو خاص احتیاط برتنا ہوگی کیونکہ اگر آپ کے دانت چمکدار سفید نہیں ہیں تو زیادہ تیز رنگوں کی لپ اسٹک میں آپ کے دانت زردی مائل نظر آئیں گے۔ اس لئے لپ اسٹک کا انتخاب اپنی جلد اور دانتوں کی رنگت کو مدنظر رکھ کر کریں۔
صحیح اور درست زاویے سے کھینچی گئی تصویر لوگوں کو آپ کی طرف متوجہ ہونے پر مجبور کردے گی۔ اگر آپ کی ٹھوڑی بھاری ہے یعنی ”ڈبل چن“ تو پھر سر کو دائیں یا بائیں جانب جھکا کر تصویر کھینچنے سے یہ خامی چھپ جائے گی۔ اس کے علاوہ اگر آپ تصویروں کو ایڈٹ کرنا جانتے ہیں، تو پھر یہ آپ کیلئے کسی نعمت سے کم نہیں۔ یہ یقین کرلیں کہ آپ مناسب اور درست روشنی میں ہیں کیونکہ روشنی کو اگر صحیح انداز میں استعمال کیا جائے تو یہ تصویر کو چار چاند لگا سکتی ہے۔ کچھ افراد کے کلوز اپ اور کچھ کی دور سے کھینچی گئی تصاویر بہتر محسوس ہوتی ہیں۔ آخری ٹپ یہ ہے کہ تصویر کھینچنے سے قبل آپ کے دانت خشک ہونے چاہئیں۔